Parveen Shakir | Parveen Shakir Poetry | Parveen Shakir ghazal | Parveen Shakir Romantic Poetry | Parveen Shakir Poetry In Urdu 2 Lines

 Parveen Shakir | Parveen Shakir Poetry | Parveen Shakir ghazal |

 Parveen Shakir Romantic Poetry | Parveen Shakir Poetry In

 Urdu 2 Lines

Parveen Shakir




Ik Naam Kiya Likha Tera Sahil Ki Rait Par

Phir Umar Bhar Hawa Se Meri Dushmani Rahi





اک نام کیا لکھا تیرا ساحل کی ریت پر 
پھر عمر بھر ہوا سے میری دشمنی رہی
Parveen Shakir Poetry



Kaanp Uthi Hon Main Soch Kar Tanhai Main


Mere Chehre Pe Tera Naam Na Parh Le Loi







کانپ اٹھی ہوں میں یہ سوچ کر تنہائی میں 
میرے چہرے پہ تیرا نام نہ پڑھ لے کوئی
Parveen Shakir Romantic Poetry 

Wo Mila To Sadiyon K Bad Bhi Mere Lab Koi Gila Na Tha


Use Meri Khamooshi Ne Rula Diya Jise Guftugoo Par Kamal Tha







وہ ملا تو صدیوں کے بعد بھی میرے لب پر کوئی گلہ نہ تھا 
اسے میری خاموشی نے رلا دیا جسے گفتگو پر کمال تھا
Parveen Shakir Ghazal




Main Sach Kahoongi Magar Phir Bhi Har Jaongi


Wo Jhoot Bolega Or Lajawab Kar Dega





میں سچ کہوں گی مگر پھر بھی ہار جاؤں گی 

وہ جھوٹ بولے گا اور لاجواب کر دے گا





Parveen Shakir Best Poetry

Talukat K Barzakh Main Hi Rakha Mujhe


Woh Mere Haq Main Na Tha Or Khilaf Bhi Na Huwa






تعلقات کے برزخ میں ہی رکھا مجھ کو 
وہ میرے حق میں نہ تھا اور خلاف بھی نہ ہوا






Parveen Shakir Poetry Sms



Khuda Kare Teri Aankhen Hamesha Hansti Rahen

Ye Aankhen Jin Ko Kabhi Dukh Ka Hosla Na Huwa





خدا کرے تیری آنکھیں ہمیشہ ہنستی رہیں
یہ آنکھیں جن کو کبھی دُکھ کا حوصلہ نہ ہوا
Parveen Shakir In Urdu Images



Is Dil Main Shoq-e-Deed Ziyada Hi Ho Gaya


Us Aankh Main Mere Liye Inkar Jab Se Hai






اس دل میں شوق دید زیادہ ہی ہو گیا 

اس آنکھ میں میرے لیے انکار جب سے ہے





Urdu Poetry Images



Dushmano K Sath Mere Dost Bhi Aazad Hain 

Dekhna Hai Kheenchta Hai Mujh Pe Pehla Teer Kon






دشمنوں کے ساتھ میرے دوست بھی آزاد ہیں
دیکھنا ہے کھینچتا ہے مجھ پے پہلا تیر کون






Parveen Shakir Urdu Shayari




Yon Bicharna Bhi Buhut Aasan Na Tha Us Se Magar


Jate Jate Us Ka Woh Mur Kar Dekhna Mujhe





یوں بچھڑنا بھی بہت آسان نہ تھا اس سے مگر 

جاتے جاتے اس کا وہ مڑ کر دیکھنا مجھے




Top 10 Parveen Shakir Poetry



To Badalta Hai To Be Sakhta Meri Aankhen


Apne Hathon Ki Lakeeron Se Ulajh Jati Hain





تو بدلتا ہے تو بے ساختہ میری آنکھیں 
اپنے ہاتھوں کی لکیروں سے الجھ جاتی ہیں


Waqar Bukhari

Leave a Reply

Your email address will not be published.